آیت الله العظمی نوری همدانی با حضور در بیت مرجع عالیقدر آیت الله العظمی صافی گلپایگانی، با ایشان دیدار کردند. در این دیدار که عصر  امروز شنبه  13 جمادی الأولی 1438 برگزار شد، این دو مرجع تقلید درباره مسائل حوزه و کشور، بخصوص فعالیت‌های...
Saturday: 25 / 02 / 2017 ( )

Printer-friendly versionSend by email
آیت الله العظمی صافی کی چینلز کو مباحث مہدیت پر زیادہ توجہ دینے کی تاکید

مراکز  مہدویت  حوزہٴ  علمیہ  قم  کی  مرکزی کمیٹی  کے  اراکین  نے مرجع  عالیقدر  حضرت آیت الله العظمی صافی گلپایگانی مدظله عالی  سے  ملاقات  کی۔

اس  ملاقات  کے  آغازمیں  مسجد  مقدس  جمکران  کے  متولی  حجة الاسلام و المسلمین جناب رحیمیان  نے  مراکز  مہدویت  کے  پروگرامز  اور  کارکردگی  کے  بارے  میں  مختصر  رپورٹ  پیش  کی۔

آیت  اللہ  العظمی  صافی  نے  اس  کمیٹی  کے  اراکین  کا تشکر  کیا  اور مہدویت  کے  متعلق  انجام  دی  گئیں ابحاث  کو سراہتے  ہوئے  فرمایا:مجھ  سا حقیر  نہیں  جانتا  کہ  کس  طرح  اس  بہت  ہی  اہم  عمل  کے  بارے  میں  کچھ  کہوں  چونکہ  مساٴلہ  مہدویت  سب  سے  بلند  مطالب  اور  اہم  ترین  ہدف  و  مقصد  ہے  لہذا  آپ  کا  یہ  عمل  بہت  ہی  باعظمت  اور  مقدس  ہے۔آپ  خود  شکر  کریں  اور  اسے  اپنے  لئے  عظیم  افتخار  سمجھیں۔

آپ  نے  اپنے  بیانات  میں  فرمایا:ہمارے  تمام  اعمال  کا  محور  مہدویت  ہونی  چاہئے۔ حضرت  ولی عصر عجل الله تعالی فرجه الشریف  کے  مقاصد  ہی  آپ  کے  اہداف  و  مقاصد  ہونے  چاہئیں۔اس  بارے  میں  جتنا  کام  بھی  کریں  اگرچہ  وہ  زیادہ  ہی  کیوں  نہ  ہو  لیکن  پھر  بھی  کم  ہیں۔ہمارا  حوزہ " مہدویت"  کو  اصل  مطالب  قرار  دے  اور  مہدوی  ثقافت  کی  اشاعت  کرے  اور  اس  عظیم  موضوع  کے  بارے  میں  مختلف  شعبہ  جات  اور  متعدد  علوم  کے  بارے  میں  جستجو  کرے۔

مرجع  عالیقدر  نے  دشمن  کی  طرف  سے  اعلٰی  مہدوی  ثقافت  کے  خلاف  سازشوں  کی  طرف  اشارہ  کرتے  ہوئے  فرمایا:آج  دشمنوں  کی  یہ  کوشش  ہے  کہ  وہ  شبہات  ایجاد  کرکے  لوگوں  کو  مہدوی  تہذیب  وثقافت    سے  دور  کریں  لہذا  ہم  سب  کی  ذمہ  داری   بہت  سنگین ہے  اور  ہمیں  شبہات  و  اشکالات  کا  جواب  دینا  چاہئے۔میں  یہ  عرض  کر  دوں  کہ  اگر  ملک  میں  کوئی  اچھا  کام  انجام  پائے  تو  جو  سب  سے  پہلے  مسرور  ہوں  گے  ،وہ  امام  زمانہ  علیہ  السلام  ہیں  اور  اگر  خدانخواستہ  کوئی  معصیت  اور  غیرقانونی  کام  کی  ترویج  ہو  تو  جو  سب  سے  پہلے  رنجیدہ  ہوں  گے  ،وہ  امام  زمانہ  علیہ  السلام  ہیں۔

آیت  اللہ العظمی صافی  نے  چینلز  سے  خطاب  کرتے  ہوئے  فرمایا:جن  افراد کا عوام  الناس  سے  رابطہ  ہے  جیسے  واعظین  و  مبلغین  کرام  اور  چینلزبالخصوص  صداو  سیما(ایرانی  ٹی  وی  چینل)کی  یہ  ذمہ  داری  ہے  کہ  وہ  امام  زمانہ  عجل  اللہ  تعالیٰ  فرجہ  الشریف  کی  طرف  لوگوں  کو  زیادہ  متوجہ  کریں۔ہمارے  استاد  بزرگ  حضرت  آیت  اللہ  العظمی  بروجردی  اعلی  اللہ  مقامہ  طلاب  کو  نصیحت  کرتے  تھے  کہ  آپ  اپنی  گفتار  اور  پروگراموں   کے ذریعہ  امام  زمانہ  عجل  اللہ  فرجہ  الشریف  کی  یاد  کو  لوگوں  میں  زیادہ  زندہ  رکھیں  اورہرگزامام  زمانہ  علیہ  السلام  کو  اپنے  مقاصد  و  امور  میں فراموش  نہ  کریں۔اگر  لوگ  آنحضرت  سے  ارتباط  میں  ہوں  تو  مسلماً  بہت  سی  سماجی  مشکلات  اور  پریشانیاں   برطرف  ہوجائیں  گی۔

آیت  اللہ العظمی  صافی  نے  اس  ملاقات  میں  ان تمام معززافراد اوراساتیدکا جو تحریک مھدویت میں معاون ومددگار ہیں اورجو افراد اس مقدس الٰہی کام میں اپنا قیمتی وقت صرف کرر ہے ہیں،ان  سب کا شکریہ اداکرتے ہوئےفرمایا: ناچیز بھی اس بات کوپسندکرتاہے کہ آپ کے ساتھ رہوں اوراس عظیم کام میں آپ کا شریک اورحصہ دار  رہوں۔

موضوع: 
اخباردیدارها
Wednesday / 4 February / 2015