انسان در زندگي و در راه ترقّي و تكامل، بايد با دشواري ها و سختي ها دست  وپنجه نرم كند و از گردنه هاي خطرناكي عبور نمايد و رنج ها و زحماتي را در اين راه متحمّل شود، تا به سرمنزل مقصود برسد؛ و تا بر اين دشواری ها پيروز نشده و اين گردنه ها را پشت...
يكشنبه: 1399/03/11
Printer-friendly versionSend by email
آیت اللہ العظمی صافی گلپایگانی کا سیستان و بلوچستان کے سیلاب زدہ علاقوں کی طرف ہیئت (کمیٹی) کا بھیجنا اور سیلاب زدہ لوگوں کی مدد کے لئے سہم مبارک امام علیہ السلام کا تیسرا حصہ خرچ کرنے کی اجازت دینا

مرجع عالیقدر حضرت آیت اللہ العظمی صافی گلپیگانی دام ظلہ الوارف نے سیستان و بلوچستان میں سیلاب کے افسوسناک واقعہ پر سیلاب زدہ لوگوں سے ہمدردی کا اظہار کیا اور سیلاب زدہ علاقوں کی موجودہ صورت حال  کا جائزہ لینے اور ان علاقوں  کے شریف لوگوں کی مدد کے لئے ایک ہیئت (کمیٹی) کو ان علاقوں کی طرف بھیجا اور فرمایا کہ : محترم مؤمنین سیلاب زدہ لوگوں کی مدد کرنے کے لئے سہم مبارک امام علیہ السلام کے تیسرے حصہ سے استفادہ کر سکتے ہیں ۔

نیز آپ نے تمام مسئولین اور لوگوں سے اس بات کا تقاضا کیا کہ وہ ان سیلاب زدہ لوگوں کی مدد کرنے اور ان کی مشکلات کو رفع کرنے کے لئے اقدامات کریں  ۔

موضوع:

دوشنبه / 23 دى / 1398