بسم الله الرحمن الرحیم در کتاب شریف عيون اخبار الرضاعلیه السلام آمده است: حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ مُوسَی بْنِ الْـمُتَوَکِّلِ رَضِيَ اللهُ عَنْهُ قَالَ: حَدَّثَنَا أَبُو الْـحُسَیْنِ مُحَمَّدُ بْنُ جَعْفَر الْأَسَديُّ قَالَ: حَدَّثَنَا...
پنجشنبه: 1400/07/29 - (الخميس:14/ربيع الأول/1443)

Printer-friendly versionSend by email
افغانستان میں المناک واقعات کے خلاف عالیقدر شیعہ مرجع آیت اللہ العظمی صافی گلپایگانی دام ظله العالی کا پیغام

بسم الله الرحمن الرحیم

انّ ربّک لبالمرصاد 

آج کل دنیا بہت ہی خوفناک اور افسوسناک واقعات کا مشاہدہ کر رہی ہے ، اور اس ظلم و بربریت  اور جرائم سے انسانیت کا ضمیر اور انسانوں کی پاکیزہ فطرت شرمندہ ہے ۔

کیاکسی گروہ کے لئے یہ  ممکن ہے کہ وہ خود کو انسان کہلوائے ، لیکن وہ (گروہ) انسانوں کے خلاف ہی ان تمام جرائم کا مرتکب بھی ہو ؟!

ان دہشت گردوں کی خشونت ، بربریت اور درندگی ایک طرف ؛ لیکن دوسری طرف دنیا والوں ، ، حکومتوں اور انسانی حقوق کی علمبردار تنظیموں کی خاموشی حیران کن اور شرمناک ہے!

کسی ایسے گروہ پر اعتماد کرنا ایک بہت بڑی اور ناقابل تلافی غلطی ہے کہ ماضی میں جس کا شرّ اور قتل و غارت پوری دنیا پر واضح ہے!

میں اپنی دینی اور انسانی ذمہ داری  کی بناء پر تمام حکومتوں ، بین الاقوامی اداروں  ، بالخصوص اقوام متحدہ ، اسلامی کانفرنس کی تنظیم (OIC)اور اسلامی جمہوریہ ایران کی حکومت کو خبردار کرتا ہوں کہ اس ظلم و ستم ، درندگی ، افغانستان میں مظلوم لوگوں کی بڑی تعداد میں شہادت اور ہزاروں  کی تعداد میں عورتوں ، مردوں ، بچوں ، جوانوں اور  بوڑھوں  کے بے گھر ہونے  کے خلاف سنجیدگی سے رد عمل دکھائیں  ۔

یقیناً ان کی آج کی خاموشی مستقبل میں پچھتاوے اور ندامت کا سبب ہے ۔

و السلام علی من اتّبع الهدی

قم المقدسہ،  ۳  ذی الحجه سنہ ۱۴۴۲ ہجری

لطف الله صافی

موضوع:

پنجشنبه / 24 تير / 1400